Rawalpindi police officer uses unauthorized force against the citizen

وردی میں بدمعاش، پولیس افسر سرعام شہری پہ تشدد کرتے ہوئے۔ پولیس والے کو ظلم سے روکنے کی کوشش کرنے والے نوجون کو سرکاری پسٹل اور وردی کے زور پہ اغوا کر کے تھانے لے گیا۔

Video of police officer using unauthorized force against the citizen

تفصیلات کے مطابق ‏سٹیلائٹ ٹاؤن روالپنڈی تھانہ وارث خان کا پولیس آفیسر اے ایس آئی ظفراللہ ایک غریب ادمی پر تشدد کر کے اپنی بدمعاشی دکھا رہا تھا۔ وہاں پر موجود ایک نوجوان وکیل نے اسکو اس غیرقانونی عمل سے روکنے کی کوشش کی۔ تو ظفراللہ اسے اپنے سرکاری پسٹل کے زور پر جان سے مارنے کی دھمکیاں دیکر تشدد کا بناتے ہوئے تھانے لے گیا۔‎

وقوعہ پہ موجود شہریوں میں سے ایک شخص نے واقع کی مکمل ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پہ شیئر کر دی۔ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد

‏‎ایس پی راول راۓ مظہر اقبال نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوۓ اے ایس آئی ظفر اللہ کو معطل کر دیا۔ راولپنڈی پولیس کا کہنا ہے کہ ظفراللہ کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ مزید برآں مزکورہ کے خلاف بعد از انکوائری محکمانہ کاروائی بھی عمل میں لائی جا رہی ہے۔

Leave a Reply