ڈیرہ غازی خان میں پانچ سالہ بچی پہ تشدد کا واقع

ڈیرہ غازی خان میں پانچ سالہ بچی پہ بہیمانہ تشدد کا شرمناک واقع۔ ملزم کی طاقت کے ڈر سے بچی کے ماں باپ اس کے خلاف رپورٹ درج کرانے سے بھی خوفزدہ ہیں۔

‏تفصیلات کے مطابق کلیم حفیظ ولد میاں حفیظ احمد قوم قریشی سکنہ سمینہ سادات تحصیل و ضلع ڈیرہ غازی خان “جو پیشہ کے لحاظ سے گورنمنٹ ہائیر سکینڈری سکول سمینہ ضلع ڈیرہ غازی خان میں ٹیچر ہے” نے گھر میں کام کرنے والی پانچ سالہ معصوم بچی پر بے پناہ تشدد کیا۔ جس کے نشانات واضع طور پر ویڈیو میں دیکھے جا سکتے ہیں۔

‏ملزم میاں مصطفی قریشی چیئرمین یونین کونسل سمینہ سادات کا داماد ہےاور اس کے اس جرم میں پشت پناہی اور ایک بااثر ہونے کی وجہ سے ابھی تک گرفتار نہیں ہوا اور بچی کے والدین ان باثر ملزمان کے خلاف کاروائی کرنے سے ڈرتے اور سخت دباؤ میں ہیں۔

سوشل میڈیا پہ بچی کے حق میں لوگوں نے آواز اٹھانی شروع کی اور مطالبہ کیا کہ ریاست کروائی کر کے ملزم کو گرفتار کرے۔

واقع کی ویڈیو وائرل ہونے پہ جب پولیس ان کے پاس گئی تو ان کے والدین نے ڈر کے مارے کاروائی کرنے سے انکار کر دیا افسوس کے ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے باوجود انسانی حقوق کی تنظیموں نے بھی چپ سادھ لی ۔

ڈیرہ غازی خان میں پانچ سالہ بچی پہ بہیمانہ تشدد کرنے والا استاد کلیم حفیظ جیل کی سلاخوں کے پیچھے

تاہم واقع کی ویڈیو سوشل میڈیا پہ وائرل ہونے کے بعد ڈیرہ غازی خان پولیس نے ماں باپ کے کسی بھی کاروائی میں حصہ لینے سےانکار کےباوجود ریاست کی جانب سے ملزم کے خلاف مقدمہ درج کر کے اسے گرفتار کر لیا۔

Leave a Reply